128

مڈکلشٹ میں کورونا مریضوں کی تعداد میں اچانک اضافہ، 24افراد میں وائرس کی تصدیق ہوگئی

چترال (نذیر حسین شاہ)لوئر چترال کے خوبصورت سیاحتی وادی مداک لشٹ میں کورونا مریضوں کی تعداد میں اچانک اضافہ دیکھنے میں آیاہے جہاں 40افراد کا ٹیسٹ لینے پر 24کو اس مہلک مرض میں مبتلا پایا گیا جن میں سے 4کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے جنہیں آغا خان ہیلتھ سروس کے قائم کردہ کووڈ 19ایمرجنسی رسپانس سنٹرمنتقل کیا گیا ہے جبکہ باقی مریض ان کے گھروں میں ہی آئسولیٹ کردئیے گئے۔ ذرائع نے بتایاکہ متاثرہ مریضوں میں سے اکثریت ملک کے دیگرحصوں سے سفر کرکے آئے تھے جبکہ ان کے قریبی رشتہ دار بھی متاثر ہوگئے۔ آغاخان ہیلتھ سروس کے ریجنل ہیڈ معراج الدین نے میڈیا کے استفسار پر بتایاکہ متاثرہ افراد کے عزیز اور رشتہ داروں سے سیمپل لے کر ٹیسٹ کے لئے بھیجا جار ہا ہے جن کے نتا ئج آنے پر صورت حال واضح ہوجائے گی۔انہوں نے کہاکہ ایک ڈاکٹر پر مشتمل سہ رکنی میڈیکل ٹیم علاقے کی طرف روانہ کیا گیا ہے۔ مداک لشٹ سے موصولہ اطلاعت کے مطابق تمام متاثرہ افراد کے گھروں میں آنے جانے کا سلسلہ بند کردیا گیا ہے جوکہ ان کے فیملی ممبرز اور عزیز وں کے ٹیسٹ کے نتائج آنے تک جاری رہے گا۔آغا خان رورل سپورٹ پروگرام کے سینئر منیجر فرید احمد نے بدھ کے روز کورونا وائرس سے متاثر مداک لشٹ گاؤں میں سینی ٹائزر، صابن، فیس ماسک، ڈس انفکٹنٹ عام لوگوں اور رضاکاروں کے لئے پی پی ایز تقسیم کئے۔ اس موقع پر عوامی آگہی پھیلانے کے حوالے سے ایک سیشن منعقد کیا گیا۔
درین اثناء لویر اور اپر چترال میں کرونا کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ دیکھا جارہا ہے۔ دونوں اضلاع کے انتظامیہ سے موصول شدہ اعدادوشما ر کے مطابق لویر چترال میں 176اور اپر چترال میں 23افراد کووڈ 19کے مریض ہیں۔ چترال میں کووڈ 19کے مریضوں میں غیر معمولی اضافے کی وجہ عوام کی انتہائی لاپروائی اور بازار سمیت دفاتر میں ایس اوپیز پر عمل نہ کرنا، فیس ماسک استعمال نہ کرنا بتائی جاتی ہے۔