148

نقب زنی کرنے والاگروہ گرفتار، مسروقہ سامان اور نقدی برآمد

چترال(محکم الدین)چترال پولیس نے ضلع چترال میں نقب زنی کرنے والے ایک منظم گروہ کو بے نقاب کرکے ان کے قبضے سے لاکھوں روپے مالیت کے مسروقہ سامان برآمد کرلیا۔ تفصیلات کے مطابق چترال شہر کے بونی روڈ پر واقع دکانوں میں نقب زنی کے واقعات کے بعد ڈی پی او چترال وسیم ریاض کی خصوصی ہدایت ایس پی انوسٹی گیشن خالد خان اور ایس ڈی پی او ظفر احمد کی قیادت میں چترال پولیس نے ان وارداتوں میں ملوث ایک منظم گروہ کو بے نقاب کرکے گرفتار کرلیا اور انکے قبضے سے لاکھوں روپے مالیت کا سامان اور ڈیڑھ لاکھ سے زیادہ نقد رقم بھی بر آدمد کر لیا۔ ملزمان کا تعلق اپر دیر سے بتایا گیا ہے جن میں محب اللہ، بخت زیب اور مجید اللہ شامل ہیں۔ ملزمان رات کی تاریکی میں چترال بونی روڈ پر واقع دکانوں میں نقب زنی کرکے ایک لاکھ 59روپے مالیت کے سامان چرا کر لے گئے تھے۔ مقامی پولیس نے جدید ٹیکنالوجی بروئے کار لاتے ہوئے انتھک محنت سے ملزمان تک پہنچنے میں کامیاب ہوکر ان سے مسروقہ سامان برآمد کرلیا جبکہ واردات میں استعمال ہونے والی گاڑی بھی اپنے قبضے میں لے لی۔ پولیس نے دوران تفتیش ملزمان سے گاڑیوں کی چار بیٹریاں بھی برآمد کرلی جن کے بارے میں ملزمان نے انکشاف کیا کہ انہوں نے واردات کے دوران روڈ کے قریب کھڑے گاڑیوں سے نکال لئے تھے۔ چترال پولیس کے پریس ریلیز میں ان گاڑی مالکان کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ پولیس اسٹیشن کوغوزی کے تفتیشی افسر اکبر عزیز سے رابطہ کرکے اپنے سامان کی نشاندہی کرکے اپنی بیٹری لے جائیں۔ درین اثناء چترال کے عوامی حلقوں نے چترال پولیس کی اس کارکردگی کو سراہا ہے۔