بدھ. ستمبر 28th, 2022

اسلام آباد(ویب ڈیسک)وزیراعظم عمران خان نے پی ٹی آئی کے تمام تنظیمی ڈھانچے کو تحلیل کر دیا، جس کے بعد نئی آئینی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے۔ وزیراطلاعات فواد چوہدری نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ اب کسی رشتہ دار کو ٹکٹ دینے کا فیصلہ مقامی قیادت نہیں کرے گی، وفاقی سطح پر فیصلے ہوں گے، پارٹی کا نیا انتظامی ڈھانچہ تشکیل دیا جائے گا۔
فواد چوہدری نے کہا کہ کسی کو لیڈر مانا جاتا ہے تو وہ عمران خان ہیں، تحریک انصاف کے سوا کوئی ایسی پارٹی نہیں جو اتنی بڑی تعداد میں ٹکٹ جاری کرے، تحریک انصاف ملک کی سب سے بڑی جماعت ہے، تحریک انصاف نیچے جاتی ہے تو پاکستان کی سیاست نیچے جائے گی۔
وزیر اطلاعات نے کہا کہ وزیراعظم نے خیبرپختونخوا کے بلدیاتی الیکشن میں وزیراعلیٰ محمود خان، پرویز خٹک سے بات چیت کی، وزیراعظم نے تحریک انصاف کے پی کی کارکردگی پر عدم اعتماد کا اظہار کیا۔
فواد چوہدری نے کہا کہ ویلیج کونسل کے انتخابات کے نتائج کے مطابق تحریک انصاف اب بھی بڑی جماعت ہے، پی ٹی آئی چاروں صوبوں میں ہے، پیپلز پارٹی صرف اندرون سندھ کی جماعت ہے، ن لیگ صرف پنجاب تک محدود ہے۔
انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کو فارگرانٹڈ نہیں لیا جاسکتا، انتخابات میں 1100 سے زائد ٹکٹ دیے جاتے ہیں، پی ٹی آئی کے علاوہ کسی جماعت کی حیثیت ہی نہیں کہ اتنے لوگ انتخابات میں کھڑے کرسکے۔