94

یارخون لشٹ میں سیلاب نے تباہی مچادی، ایک بچی جان بحق ہوگئی

چترال(بشیر حسین آزاد) گذشتہ روز اپر چترال کے دوردراز گاؤں یارخون لشٹ میں گلیشیرپگھلنے سے آنے والے سیلاب نے علاقے میں تباہی مچادی۔ تفصیلات کے مطابق دورافتادہ علاقے یارخون لشٹ میں گلیشیر پگھلنے سے آنے والے سیلاب کے نتیجے میں 6گھرمکمل طور پر اور 10گھرجزوی طور پر سیلاب برد ہوگئے جبکہ ایک بچی جان بحق ہوگئی جن کی لاش بعد ازاں سیلاب ملبے سے نکال کر ہفتے روز کے سپردخاک کیا گیا۔ یارخون لشٹ سے آمدہ اطلاعات کے مطابق گرمی میں شدت کے ساتھ ندی نالوں میں گلیشیرزسے آنے والی پانی نے سیلابی ریلوں کی شکل اختیار کرنا شروع کیا تھاجوکہ جمعہ کے روز اپنی انتہا کو پہنچ گئی اور سیلاب کا رخ گاؤں کی طرف ہوگیا ہے۔سیلابی ریلے نے املاک، فصلوں اور باغات کو نقصان پہنچا دیا۔ ڈپٹی کمشنر اپر چترال شاہ سعود نے کہا کہ سیلاب کی اطلاع ملتے ہی اشیائے خوردونوش کے پیکج علاقے کی طرف روانہ کئے گئے ہیں اور علاقے کے اسسٹنٹ کمشنر اور تحصیلدار کو بھی یارخون لشٹ روانہ کئے گئے ہیں۔ انہوں نے گھروں کی مکمل اور جزوی طور پر سیلاب بردگی کی تصدیق کرتے ہوئے کہاکہ سیلاب سے پولیس اسٹیشن اور چترال سکاوٹس کے پوسٹ میں بھی پانی بھر جانے کی وجہ سے عمارتوں کو خالی کئے گئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ اگر گرمی کی شدت میں کمی آگئی تو مزید سیلابی ریلوں کے آنے کا خطرہ کم ہوگا۔ درایں اثناء صورتحال کا جائزہ لینے کیلئے ضلعی انتظامیہ نے اسسٹنٹ کمشنر اور دیگر عملہ کو فوری طور پر علاقے میں بھیجد یا ہے۔