128

چترال کے سڑکوں کی تعمیر عنقریب شروع ہوگی،عوام منفی پراپیگنڈوں پر کان نہ دھریں /وزیر زادہ

چترال(محکم الدین)وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا کے معاؤن خصوصی وزیر زادہ نے کہا ہے کہ چترال کے سڑکوں کی منسوخی کی بات میں صداقت نہیں ہے تاہم گرم چشمہ اور اپر چترال روڈ کی تعمیر میں کچھ وقت لگ سکتا ہے، کالاش ویلی روڈ کی تعمیر اور چترال پشاور این ایچ اے روڈ کی مرمت جلد شروع کی جائے گی۔ پشاور سے ٹیلیفون پر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے وزیر زادہ نے کہا کہ وزیر اعلیٰ کے پی سیاحت کے فروغ کیلئے چترال کی سڑکوں کی تعمیر میں انتہائی دلچسپی رکھتے ہیں اور انہوں نے وفاقی وزیر مراد سعید سے اس حوالے بات بھی کیا تھا جس میں وزیر اعلی نے اس کا امر اظہار کیا تھا کہ وفاقی حکومت اگر یہ روڈ نہیں بناتی توصوبائی حکومت خود یہ سڑک تعمیر کرے گی۔ انہوں نے کہا اس سلسلے میں مجھے جو ذمہ داری سونپ دی گئی تھی اُس کے تحت میں نے چیئرمین اور جی ایم این ایچ اے سے ملاقات کی جنہوں نے بتایا کہ یہ روڈ کینسل نہیں ہوئے، دستاویزات مکمل ہو چکے ہیں، صرف زمین کی خریداری نہیں ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ فوری طور پر کلاش ویلی روڈ میں پیش رفت ہوئی ہے اور ماہ جون تک اس پر کام شروع کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ زمین کی خریداری اگر پہلے ہو چکی ہوتی تو آج مزید انتظار کی ضرورت نہ کرنی پڑتی۔ وزیر زادہ نے کہاکہ میر کھنی سے چترال تک مین روڈ کی حالت کی خرابی کا بھی میں نو ٹس لیا اور چیئرمین اور جی ایم این ایچ اے کے ساتھ حالیہ ملاقات میں سے تفصیلی بات کی ہے اور انشا اللہ اپریل تک اس روڈ کی مرمت کی جائے گی جس پر تقریبا آٹھ کروڑ روپے خرچ کئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ چیئرمین این ایچ اے نے اس روڈ کیلئے ممبر پلاننگ اور جی ایم کو خصوصی ہدایت کی ہے۔ اس روڈ کی مرمت کے بعد لوگوں کو کسی حد تک خراب سڑک سے نجات مل جائے گا اور سہولت کے ساتھ سفر کر سکیں گے۔ وزیر زادہ نے کہا کہ وہ چترال کے تمام مسائل سے بخوبی آگاہ ہیں اور وہ اُن مسائل کے حل کے لئے پر عزم ہیں کیونکہ چترال کیلئے کام کرنا اُن کی اولین ترجیح ہے، اس لئے چترال کے عوام افواہوں پر کان نہ دھریں۔