59

ججز کے ساتھ اظہار یکجہتی؛چترال کے وکلاء کا عدالتوں کابائیکاٹ،ریلی اور جلسے کا انعقاد کیا

چترال(گل حماد فاروقی)پاکستان بار کونسل اور خیبر پختونخوا بار کونسل کی کال پر ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن کے اراکین نے جسٹس فائز عیسیٰ کے ساتھ یکجہتی کے طور پر عدالتوں کا بائیکاٹ کرکے احتجاجی جلسہ کیا۔ اس سلسلے میں ایک ریلی بھی نکالی گئی اور چترال کے وکلاء نے ہاتھوں میں پلے کارڈ اور بینر اٹھا رکھے تھے جن پر عدلیہ کی آزادی اور جسٹس فائز عیسیٰ کی حمایت میں نعرے درج تھے۔ انہوں نے ڈسٹرکٹ کونسل کے سامنے جلسہ بھی منعقد کیا جس کی صدارت ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن چترال کے صدر خورشید حسین مغل نے کی۔

جلسہ میں وکلاء برادری کے علاوہ کثیر تعداد میں سول سوسائٹی کے افراد نے بھی شرکت کی۔ احتجاجی جلسے سے رکن خیبر پختونخوا بار کونسل عبد الولی خان ایڈوکیٹ، صدر خورشید حسین مغل ایڈوکیٹ، نیاز اے نیازی ایڈوکیٹ،ایم آئی خان سرحدی ایڈوکیٹ ودیگر نے خطاب کیا۔ جلسہ میں متفقہ طور پر ایک قرارد داد منظور کیا گیا جسمیں مطالبہ کیا گیا کہ ججز کے خلاف بے بنیاد ریفرنس فوراً واپس لیا جائے۔ انہوں نے خبردار کیا کہ اگر ججز کے خلاف ریفرنس واپس نہیں لیا گیا تو چترال بار کونسل مکمل ہم آہنگی کے ساتھ پاکستان بار کونسل اور صوبائی بار کونسل کے فیصلہ جات کو آئندہ بھی مکمل طور پر مان کر ان کی پیروی کرے گی اور اس تحریک کو منطقی انجام تک پہنچائیں گے۔